Tuesday, October 21, 2014

آٹھ اسمارٹ فونز جن کے منفرد فیچرز کا کوئی مقابلہ نہیں


آج کے عہد میں بیشتر اسمارٹ فونز میں ہارڈویئر اور سافٹ ویئر اپنے حریف ڈیوائسز سے ملتے جلتے ہوتے ہیں اور ایک سے دوسرے فون کے درمیان بہت کم فرق ہوتا ہے، مگر کچھ کمپنیاں ایسی ہیں جو اس بھیڑچال کی دوڑ سے باہر نکل کر اپنے اسمارٹ فونز میں ایسے منفرد فیچرز متعارف کراتی ہیں جو کسی اور ڈیوائس میں نہیں ہوتی۔
ایسے ہی چند اسمارٹ فونز کے بارے میں جانے جو اپنے منفرد فیچرز کی بدولت دیگر سے بالکل الگ ہیں۔

 سام سنگ گلیکسی نوٹ ایج
سام سنگ گلیکسی نوٹ ایج کی خاصیب اس کی اسکرین کا بینٹ یا خم کھا جاتا ہے، اس نئے اسمارٹ فون کی ڈسپلے اسکرین چھوٹی ہے جو دائیں کونے کی جانب آجاتی ہے جس سے مین ڈسپلے پر چیزوں کو زیادہ وضاحت سے دیکھا جاسکتا ہے، سام سنگ نے اس چھوٹے ڈسپلے پینل کے حامل اسمارٹ فون کسٹم آئزڈ گیم بھی ڈیزائن کر رکھی ہے۔
ایل جی جی تھری
ایل جی کے جی تھری اسمارٹ فون کی خاصیت اس کا لیزر آٹو فوکس کیمرہ ہے، یہ پہلی بار ہے کہ کسی اسمارٹ فون میں فوکسنگ سسٹم کو استعمال کیا گیا ہے، اس سے کم طاقت کی لیزر نکل کر مطلوبہ چیز کے بہترین اینگل پر فوکس ہوجاتی ہے جس سے بہترین تصویر لینا آسان ہوجاتا ہے چاہے وہ چیز، انسان یا جانور حرکت ہی کیوں نہ کررہا ہو مگر تصویر کا معیار متاثر نہیں ہوتا۔
(ایچ ٹی سی ون(ایم ایٹ
ایچ ٹی سی ون (ایم ایٹ) دنیا کا واحد اسمارٹ فون ہے جس کے پشت پر دو کیمرے نصب ہیں، ایک چھوٹا رئیر کیمرہ کسی تفصیل کی باریکیوں کو نمایاں کرتا ہے، جیسا دوسرے کئی اسمارٹ فونز میں بھی ہوتا ہے، تاہم اس فون کی خاصیت یہ ہے کہ اس میں تصویر لینے کے بعد بھی زیادہ باریکی کو ایڈ کیا جاسکتا ہے، ایسا ہونے کی وجہ دوسرے کیمرے کی موجودگی ہے جو مرکزی کیمرے کے ساتھ ہی اس منظر کو اپنی آنکھ میں محفوظ کرلیتا ہے جس سے تصویر کو زیادہ بہتر بنایا جاسکتا ہے۔
امیزون فائر فون
امیزون نے حال ہی میں اپنا پہلا اسمارٹ فون متعارف کرایا ہے جس کی خاصیت پانچ فرنٹ کیمرے ہیں، اسکرین سے ذرا اوپر موجود ایک کیمرہ تو روایتی طریقے سے کام کرتا ہے جبکہ دیگر چار کیمرے جو موبائل کے چاروں کونوں میں ہیں، صارف کی آنکھوں کو اسکین کرتے ہیں، جس کے بعد آئی ٹریکنگ ٹیکنالوجی کے ذریعے صارف مینیو میں آنکھوں کی مدد سے اس پر اپنی مرضی کا کوئی بھی کام کرسکتے ہیں۔
ایل جی جی فلیکس
ایل جی کا جی فلیکس اسمارٹ فون دنیا کا واحد ہیڈسیٹ ہے جو خودکار طور پر اپنا علاج کرتا ہے، اگر اس فون پر خراش آجائے یا یہ گر جائے تو یہ تمام خراشیں یا خرابیاں یہ اپنے طور پر مرمت کرلیتا ہے۔
یوٹا فون
یوٹا فون ایک ایسا اسمارٹ فون ہے جس میں ایل سی ڈی اسکرین کو سامنے اور پشت پر ای لنک ڈسپلے کو استعمال کیا گیا ہے، اس دوسری اسکرین کے ذریعے اس ڈیوائس کو جیب میں آجانے والے ای بک ریڈر کے طور پر بھی استعمال کیا جاسکتا ہے۔
نوکیا لومیا 1020
نوکیا لومیا 1020 وہ اسمارٹ فون ہے جس میں اب تک سبسے زیادہ ریزولوشن والا 41 میگاپکسلز کا کیمرہ استعمال کیا گیا ہے، یہ کسی بھی اسمارٹ فون میں نصب سب سے بہترین کیمرہ ہے، اس سے پہلے نوکیا کے ہی ایک ماڈل 808 میں ایسا ہی کیمرہ نصب کیا گیا تھا مگر یہ فون اب تیار نہیں کیا جاتا۔
جنوی ایلفی ایس 5.5
جنوئی ایلفی ایس 5.5 دنیا کا سب سے پتلا اسمارٹ فون ہے جس کی مجموعی موٹائی صرف 5.5 ملی میٹر ہے اور اس کی اسکرین 5 انچ کی ہے۔

No comments: